ناسا کمپنی ان لوگوں کو 18500 ڈالر آفر کر رہی ہے جو 60 دن لیٹ کر گزارنے کیلئے تیار ہیں

ہم سب جانتے ہیں کہ خلا کا سفر صرف مہنگا ہی نہیں، خطرناک بھی ہے۔ اگر انسانوں کو مریخ پر بھیجنا ہے تو سائنسدانوں کیلئے یہ جاننا اور سمجھنا ضروری ہے کہ خلا کا سفر انسانی جسم پر کس طرح اثر انداز ہوتا ہے۔ کشش ثقل نا ہونے کی وجہ سے خون ٹانگوں میں نہیں جاتا اور سر میں ہی اکٹھا ہو جاتا ہے۔ اس لئے ناسا اور ای-ایس-اے ایک ریسرچ کر رہے ہیں۔ اس ریسرچ کیلئے انہیں دو درجن لوگوں کی ضرورت ہے جن کو ساٹھ دن لیٹ کر ہی گزارنے ہیں۔ اس ریسرچ میں حصہ لینے والوں کو 18500 ڈالر دیئے جائیں گے اور جرمنی جانا پڑے گا۔

کریڈٹ: ESA

البتہ اس ریسرچ میں حصہ لینے والوں کے لئے کچھ شرائط بھی ہیں۔ ان کی عمر 24 سے 55 سال کے درمیان ہونی چاہیے، صحتمند ہونا چاہیے اور ان کو جرمن زبان بھی آنی چاہیے۔ یہ ریسرچ ستمبر میں شروع ہو گی اور 89 دن تک چلے گی۔ ریسرچ ہونے سے پہلے پانچ دن منتخب ہونے والوں کو ماحول سے آشنا کیا جائے گا اور 60 دن کی ریسرچ کے بعد 14 دن صحت کی بحالی کیلئے وہاں گزاریں گے۔

کریڈٹ: ESA

ریسرچ کے دوران انہیں ہر کام لیٹے ہوئے ہی کرنا ہو گا۔ کھانا کھانے سے لیکر واش روم جانے تک۔ وہ ٹیلی ویژن بھی دیکھ سکیں گے اور انہیں پڑھنے کیلئے کتابیں بھی مہیا کی جائیں گی۔

کریڈٹ: ESA

کریڈٹ: ESA

ریسرچ کے دوران سائنسدانوں کے ساتھ ساتھ ڈاکٹرز، ماہر نفسیات اور ماہر غذائیت بھی موجود ہوں گے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے