سخن شناس حضرات کیلئے بہترین شاعری


- -

جو بھی دکھ یاد نہ تھا یاد آیا


جسم شعلہ ہے جبھی جامۂ سادہ پہنا


آنکھ سے دور نہ ہو دل سے اتر جائے گا


اس کو جدا ہوئے بھی زمانہ بہت ہوا


دل منافق تھا شب ہجر میں سویا کیسا


خود کو ترے معیار سے گھٹ کر نہیں دیکھا


چل نکلتی ہیں غم یار سے باتیں کیا کیا



اردو حقائق 2020